Saturday, June 22, 2024

چھٹے مرحلے کی 8 سیٹوں پر آج رک گئی ہے انتخابی مہم، کئی دبنگ اوردبنگوں کی بیویاں ہیں میدان میں

(ترہت نیوزڈیسک)

  لوک سبھا انتخابات کے چھٹے مرحلے میں بہار کی آٹھ سیٹوں پر 25 مئی کو ووٹنگ ہونی ہے۔ ان سیٹوں پر صبح 7 بجے سے شام 6 بجے تک ووٹنگ ہوگی۔ اب تک بہار میں لوک سبھا کی کل 24 سیٹوں پر پانچ مرحلوں میں ووٹنگ ہو چکی ہے۔ اس کے بعد چھٹے مرحلے میں والمیکی نگر، مغربی چمپارن، مشرقی چمپارن، گوپال گنج، سیوان، ویشالی، شیوہر اور مہاراج گنج کی 8 سیٹوں پر انتخابات ہونے ہیں۔ ان سیٹوں پر کہیں سے کوئی دبنگ تو کہیں سے دبنگ کی بیوی الیکشن لڑ رہی ہیں۔ چھٹے مرحلے  کے لیے انتخابی مہم آج جمعرات (23 مئی) شام 5 بجے بند کر دی گئی ہے۔

دراصل، چھٹے مرحلے میں دبنگ لیڈر آنند موہن کی بیوی لولی آنند شیوہر لوک سبھا سیٹ سے الیکشن لڑ رہی ہیں۔ اسی طرح سیوان سے (مرحوم) محمد شہاب الدین کی اہلیہ حنا شہاب اپنی قسمت آزما رہی ہیں۔ وہیں اگر ویشالی سیٹ کی بات کریں تو دبنگ لیڈر منا شکلا، جو کبھی انڈر ورلڈ سے جڑے ہوئے تھے، میدان میں ہیں۔ بی جے پی کے سینئر اور معروف لیڈر سنجے جیسوال بھی والمیکی نگر سے انتخابی میدان میں ہیں۔

ساتھ ہی چھٹے مرحلے میں لوک سبھا کی آٹھ سیٹوں کے لیے کل 86 امیدوار میدان میں ہیں اور اپنی قسمت آزما رہے ہیں۔ ان 86 امیدواروں میں سے آٹھ خواتین امیدوار ہیں۔ جبکہ کل 78 مرد امیدوار میدان میں ہیں۔ ان میں سے 35 امیدوار آزاد ہیں جبکہ 23 ​​امیدوار بڑی جماعتوں سے الیکشن لڑ رہے ہیں۔ ویشالی میں زیادہ سے زیادہ 15 امیدوار میدان میں ہیں۔ مہاراج گنج لوک سبھا میں صرف پانچ امیدوار ہیں۔

مایاوتی کی بہوجن سماج پارٹی بھی سات سیٹوں پر میدان میں ہے۔ این ڈی اے میں بی جے پی سے تین امیدوار، جے ڈی یو سے چار اور لوک جن شکتی پارٹی سے ایک امیدوار میدان میں ہے۔ ہندوستانی اتحاد میں آر جے ڈی چار سیٹوں پر، کانگریس دو سیٹوں پر اور مکیش ساہنی کی پارٹی وی آئی پی دو سیٹوں پر الیکشن لڑ رہی ہے۔ کل 28 امیدوار ایسے بھی ہیں جن کا تعلق چھوٹی جماعتوں اور تنظیموں سے ہے۔ چھٹے مرحلے میں لوک سبھا کی آٹھ سیٹوں میں سے سات جنرل اور ایک گوپال گنج ریزرو سیٹ ہے۔

واضح رہے کہ ان آٹھ لوک سبھا حلقوں میں کل 1,49,32,165 ووٹر ہیں۔ ان میں 78,23,793 مرد اور 71,07,944 خواتین ووٹرز شامل ہیں۔   تیسری جنس کے ووٹروں کی تعداد 428 ہے۔ اس میں پہلی بار ووٹ ڈالنے والے 18 سے 19 سال کے ووٹرز کی تعداد 2,12,496 ہے۔ 20 سے 29 سال کے ووٹرز کی تعداد 31,49,316 ہے۔ 100 سال سے زیادہ عمر کے 3014 ووٹرز ہیں۔ 85 سال سے زیادہ عمر کے 1,04,873 ووٹرز ہیں۔ معذور ووٹرز کی تعداد 1,42,568 ہے۔   الیکشن کمیشن کی جانب سے محفوظ طریقے سے ووٹ ڈالنے کے انتظامات کیے گئے ہیں۔

Related Articles

Stay Connected

7,268FansLike
10FollowersFollow

Latest Articles